Nahjul Balagha Urdu Unicode نہج البلاغہ اردو

نہج البلاغہ كلمہ قصار نمبر 219

اکثر عقلوں کا ٹھوکر کھا کر گرنا طمع و حرص کی بجلیا ں چمکنے پرہوتا ہے۔

جب انسان طمع و حرص میں پڑ جاتا ہے تو رشوت ‘چوری ‘خیانت ‘سود خور ی اور اس قبیلے کے دوسرے اخلاقی عیوب اس میں پیدا ہوجاتے ہیں اورعقل ان باطل خواہشوں کی جگمگاہٹ سے اس طرح خیرہ ہوجاتی ہے کہ اسے ان قبیح افعال کے عواقب و نتائج نظر ہی نہیں آتے کہ وہ اسے روکے ٹوکے اور اس خواب غفلت سے جھنجھوڑے البتہ جب دنیا سے رخت سفر باندھنے پر تیار ہوتاہے اور دیکھتا ہے کہ جو کچھ سمیٹا تھا وہ یہیں کے لیے تھا ساتھ نہیں لے جاسکتا ‘تو اس وقت آنکھیں کھلتی ہیں۔